کھیل


سگی بیٹیوں سے جنسی زیادتی کے ملزم چاچا ٹی ٹوئنٹی پر پولیس تشدد کا ویڈیو منظر عام پر آگئی

اسلام آباد(آئی این پی)پاکستان کرکٹ ٹیم کے بڑے سپورٹرکے طورپرپہچانے جانے والے محمد زماں عرف چچا ٹوئنٹی20 اپنی دو سگی بیٹیوں کے ساتھ جنسی زیادتی کے الزام میں گرفتار ہوگئے ہیں۔جن کی ویڈیو بھی منظر عام پر آگئی ہے۔ویڈیو سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ چاچا ٹی ٹوئنٹی مہر زمان کو

پولیس نے دوران حراست شدید تشدد کا نشانہ بنایا ہے۔ اسے عدالت میں پیش کیا گیا تو ان کی حالت انتہائی خراب تھی۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ نورزمان مشکل سے چل پا رہا ہے اور اس کے جسم پر جگہ جگہ تشدد کے نشانات ہیں۔ پیشی کے دوران ایک جگہ پر نورزمان کو بٹھایا گیا تو صحافیوں نے اس کی ٹانگوں سے کپڑا ہٹا کر دیکھا تو وہاں بھی گہرے زخم لگے ہوئے تھے۔اس موقع پر صحافیوں نے نورزمان سے ان پر عائد کیے جانے والے الزامات کے بارے میں پوچھا تو انہوں نے ان الزامات کو بے بنیاد قرار دیا اور کہا کہ دوران حراست ان پر تشدد کیا جا رہا ہے۔میڈیارپورٹ کے مطابق چالیس سالہ چاچا ٹی ٹوئنٹی کے خلاف ان کی بیوی کی شکایت پر مقدمہ درج کیا گیاہے کہ وہ اپنی 18اور19سال کی دو بیٹیوں کے ساتھ کئی سالوں سے جنسی زیادتی کررہاتھا۔مقامی تھانہ کے ایس ایچ اوکے مطابق یہ شکایت لڑکیوں کی والدہ کی طرف سے کی گئی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈی ایچ کیو ہسپتال میں

دونوں لڑکیوں کے ابتدائی معائنے کے بعد یہ بات ثابت ہوگئی ہے کہ ان کے ساتھ جنسی زیادتی کی گئی ہے تاہم ٹیسٹ کے نمونے ڈی این اے کیلئے لاہوربھیجے گئے ہیں جن کے حتمی نتائج آنے میں دو ماہ کا بھی وقت لگ سکتاہے۔

اوپر